بارشوں سے ایک کروڑ لوگ بےگھر اور 90 فیصد فصلیں تباہ ہوگئیں، وزیر اعلیٰ سندھ

0 119

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

وزیراعلیٰ سندھ مرادعلی شاہ نے کہا ہے کہ حالیہ بارشوں سے 90 فیصد فصلیں تباہ اور ایک کروڑ لوگ بے گھر ہوئے ہیں۔

سکھر میں پریس کانفرنس کے دوران وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ رواں برس سندھ میں معمول سے 600 فیصد زیادہ بارشیں ہوئیں، اس سال جولائی میں معمول سے 350 فیصد جب کہ اگست میں 600 فیصد زائد بارشیں ہوچکیں۔

مراد علی شاہ نے کہا کہ فیصد کاشتکار فصلوں سے محروم ہوچکے ہیں، بارشوں سے متاثرہ مال مویشی کا اندازہ لگانافی الحال مشکل ہے، بارشوں کے باعث 300 سے زائد اموات ہوچکیں، ایک ہزار سے زائد لوگ زخمی، دیہات کے 15 لاکھ کچےگھر تباہ جب کہ ایک کروڑ سے زائد لوگ گھروں سے باہر ہیں۔

وزیر اعلیٰ کا کہنا تھا کہ میں نے صوبے کے 23 اضلاع کا دورہ کیا۔ پورا سندھ اس وقت دریا کا منظر پیش کررہا ہے، سکھر سے اس وقت 6 لاکھ کیوسک کا سیلابی ریلہ سکھر سے گزر رہا ہے۔

مراد علی شاہ نے بتایا کہ سندھ حکومت پورے وسائل سیلاب زدگان کی بحالی کے لئے استعمال کررہی ہے، مخیرحضرات اپنی استعداد کےمطابق مدد کریں، سیلاب متاثرین کے لئے 10 لاکھ خیموں کی ضرورت ہے، این ڈی ایم اے اور دیگر صوبوں سے ٹینٹس مانگے ہیں، ٹینٹس اور ترپال بیچنے والے کوئی بلیک مارکیٹنگ نہ کریں۔

عوام کی مشکلات سے آگاہ کرترے ہوئے وزیر اعلیٰ نے کہا کہ گیس نہ ہونےکی وجہ سےکھانا پکانا بھی مشکل ہے، متاثرین کو پکا پکایا کھانا فراہم کرنےکی کوشش کررہے ہیں،

وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ اس موقع پر صبر اوربہادری کی ضرورت ہے، عوام اس مشکل وقت میں حکومت کا ساتھ دیں، سڑکیں کھلی رکھیں، امن و امان کی فضا برقرار رکھیں۔

مراد علی شاہ نے کہا کہ وزیراعظم متاثرین کی بحالی کے لئے سندھ حکومت سے رابطے میں ہیں، وزیراعظم نے 3 بار سندھ کا دورہ کرنا چاہا، خراب موسم کےباعث نہ کرسکے، وزیراعظم نےوعدہ کیا ہے کہ سندھ کے لوگوں کو اکیلا نہیں چھوڑیں گے۔

50% LikesVS
50% Dislikes
Leave A Reply

Your email address will not be published.