مریم نواز نے پنجاب میں پیپلز پارٹی سے سیٹ ایڈجسٹمنٹ کا مطالبہ مسترد کریا

0 75

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

ایک حلقے میں ایک سے زیادہ امیدوار ہیں، پیپلز پارٹی کو کیسے ایڈجسٹ کریں،کیا پیپلز پارٹی سندھ میں ہمیں ایڈجسٹ کرے گی ،مریم نواز کا موقف
پیپلز پارٹی نے قومی اسمبلی کی 15 اور صوبائی سطح کی25 نشستیں مانگیں تھیں،شہباز شریف پیپلز پارٹی سے سیٹ ایڈجسٹ کیلئے راضی،پارٹی کے سینئر رہنما مریم نواز کے موقف کی تائید
ن لیگ کے انکار کے بعد آصف زرداری متحرک ہوگئے، پی ٹی آئی اور ن لیگ کے سینئر رہنمائوں کو پیپلز پارٹی میں شامل کرنے کیلئے یوسف رضا گیلانی اور احمد محمود کو ٹاسک سونپ دیا

لاہور:مسلم لیگ( ن) کی چیف آرگنائزر مریم نواز نے ایک بڑا فیصلہ لیتے ہوئے پنجاب میں پیپلز پارٹی کا سیٹ ایڈجسٹمنٹ کا مطالبہ مسترد کردیا ، پیپلز پارٹی نے قومی اسمبلی کی 15 اور صوبائی اسمبلی کی 25 نشستیں مانگی تھیں ،وزیراعظم شہباز شریف اور آصف زرداری نے نوازشریف سے بھی اس معاملے پر رابط کیا تھا تاہم مریم نواز اپنے فیصلے پر ڈٹ گئی۔ذرائع کا کہنا ہے کہ پنجاب اسمبلی کے انتخابات میں پیپلز پارٹی نے ن لیگ سے سیٹ ایڈجسٹمنٹ کا مطالبہ کیا تھا تاہم مریم نواز نے اس مطالبے کو یکسر مسترد کر دیا ہے ،سابق صدر آصف زرداری نے ن لیگ سے قومی اسمبلی کی15 اور پنجاب اسمبلی کی 25 نشستیں مانگی تھیں اور مطالبہ کیا تھا کہ ان نشستوں پر ن لیگ ہمارے امیدواروں کی حمایت کرے اوراپنے امیدوار کھڑے نہ کرے،ذرائع کا کہنا ہے کہ اس حوالے سے وزیراعظم شہباز شریف پیپلز پارٹی سے سیٹ ایڈجسٹمنٹ پر بات چیت کیلئے تیار تھے اور دونوں رہنمائوں نے نوازشریف سے بھی بات کی تھی تاہم مریم نواز نے پیپلز پارٹی سے انتخابی اتحاد اور سیٹ ایڈجسٹمنٹ کی مخالفت کر دی ،مریم نواز کا موقف ہے کہ ہمارے اپنے امیدوار ایک ایک حلقے میں ایک سے زیادہ ہیں، پی پی کو کیسے ایڈجسٹ کریں،تحریک انصاف چھوڑ کر ن لیگ کی حمایت کرنے والوں کو بھی ایڈجسٹ کرنا ہے،مریم نوازنے کہا کہ کیا پیپلز پارٹی کراچی یا سندھ میں ن لیگ سے سیٹ ایڈجسٹمنٹ کرے گی ؟اور ایسا ممکن ہے تو اس بارے ایک لائحہ عمل تیار کیا جا سکتا ہے ،پنجاب کی سیاست ہی مرکز پر اثر انداز ہوتی ہیں ہم اپنی جیتی نشستیں کیسے پیپلز پارٹی کے حوالے کر دیں ،ذرائع نے بتایا کہ مسلم لیگ (ن) کے سینئر رہنما ئوں کی اکثریت نے مریم نواز کے موقف کی حمایت کر دی ہے ،ذرائع کے مطابق مسلم لیگ (ن) کے انکار کے آصف زرداری خود متحرک ہوگئے ہیں اوریوسف رضا گیلانی ،احمد محمود و دیگر رہنمائوں کو ن لیگ اور تحریک انصاف کے سینئر رہنما پی پی پی میں شامل کرنے کا ٹاسک دیدیا ہے ۔

50% LikesVS
50% Dislikes
Leave A Reply

Your email address will not be published.